بی آر اے نے ریاستی مخبر کے قتل اور فائبر آپٹکس کےتاروں پر حملوں کی ذمہ داری قبول کرلی

کوہٹہ (ریپبلکن نیوز) بلوچ آزادی پسند مسلح تنظیم بلوچ ریپبلکن آرمی نےریاستی مخبر ولید کے قتل کی ذمہ داری قبول کرلی۔بی آر اے کے ترجمان سرباز بلوچ نے اپنے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ ولید کو 20 اکتوبر کو دشت سے بلوچ ریپبلکن آرمی کے سرمچاروں نے گرفتار کیا تھا۔مذکورہ شخص گوادر دشت اور گرد نواح میں سرگرم ریاستی آلہ کار ہوت تاجو کا زاتی گارڈ رہاہے۔ تفتیش کے دوران مذکورہ مخبرنے ہوت تاجو کے ہمراہ نوجوانوں کے اغواہ میں ملوث ہونے، دشث اور گرد نواح میں فوجی آپریشنوں میں براہ راست شریک ہونے کا اعتراف کیا جس کے بعد اسے ہلاک کیا گیا۔

سرباز بلوچ نے اپنے بیان میں مزید کہا ہے کہ ہمارےسرمچاروں نے 28 اور30 اکتوبرکو تمپ کے علاقے ملک آباد میں نام نہاد سی پیک منصوبے کے تحت فائبر آپٹکس کے تاروں کو کاٹ کر جلا دیا۔ انہوں نےمقامی ٹیکھداروں کو تنبیہ کرتےہوئے کہا کہ وہ ان سامراجی منصوبوں سے دور رہیں۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close