بلوچستان لبریشن فرنٹ نے قابض پاکستانی فورسز پر مختلف حملوں کی زمہ داری قبول کرلی

کوئٹہ (ریپبلکن نیوز)بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے فورسز پر مختلف حملوں کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے نامعلوم مقام سے سیٹلائٹ فون کے ذریعے بات کرتے ہوئے کہا کہ سرمچاروں نے منگل کے روز دشت میں پٹوک اور سبدان کے درمیان پکٹ سیکورٹی پر معمور دو اہلکاروں کو نشانہ بنا کر ہلاک کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: قابض فوج کے چوکیوں پر 82 ایم ایم سے حملہ

گہرام بلوچ نے کہا کہ پیر کے روز ہوشاب اور بالگتر کے درمیان ریسو کے مقام پر قائم فوجی چوکی پر ایک اہلکار کو اسنائپر رائفل سے نشانہ بنا کر ہلاک کیا۔ ان علاقوں میں کئی کیمپ اور چوکیاں نام نہاد ترقی اور چین پاکستان اکنامک کوریڈور (سی پیک) جیسے استحصالی منصوبے کی تکمیل اور عسکری تعمیراتی کمپنی فرنٹیر ورکس آرگنائزیشن (ایف ڈبلیواو) کے اہلکاروں کی حفاظت کیلئے بنائے گئے۔ بلوچ قوم نے اس منصوبے کو لاکھوں غیر بلوچوں کی آبادکاری اور استحصالی منصوبہ قرار دیکر پہلے ہی دن مسترد کیا ہے۔ سرمچاروں کا قابض آرمی اور ایف ڈبلیو او پر حملے جاری رہیں گے۔ اسی طرح اس سال درجنوں فوجی اور ایف ڈبلیو او اہلکار ہلاک کئے ہیں۔ اس سال کا تفصیلی ریکارڈ جلد ہی شائع کیا جائے گا۔

متعلقہ عنوانات

مزید خبریں اسی بارے میں

Close