تحریک لبیک کا دھرنا جاری، 200 افراد پولیس سے جھڑپوں میں زخمی

اسلام آباد(ریپبلکن نیوز) اسلام آباد میں تحریک لبیک کا دھرنا ختم کروانے کے لئے سیکیورٹی فورسز نے آپریشن کیا جس دوران 200 سے زائد افراد زخمی ہو گئے ہیں جنہیں ہسپتالوں میں منتقل کر دیا گیا ہے تاہم تین گھنٹے سے کارروائی معطل کر دی گئی ہے لیکن اب سیکیورٹی فورسز کی جانب سے دھرنا مظاہرین کے خلاف آپریشن کا دوسرا دور ہو گا اور اس حوالے سے نئے احکامات کا انتظار کیا جا رہا ہے۔ نجی ٹی وی کے مطابق مظاہرین کے خلاف آپریشن تین گھنٹے سے معطل ہے تاہم اب آپریشن کا دوسرا دور ہونے کا امکان ہے جس میں تمام اطراف سے منظم کارروائی کی جائے گی تاکہ اس معاملے کو ختم کیا جا سکے اور مظاہرین کو مکمل طور پر منتشر کیا جائے اور گرفتاریاں بھی عمل میں لائی جائیں، مشتعل مظاہرین نے پولیس کی 10 سے زائد گاڑیاں نظر آتش کر دی ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مظاہرین کے خلاف کارروائی تین گھنٹے سے معطل ہے اور اب نئے احکامات کا انتظار کیا جا رہا ہے۔ نجی ٹی وی کا کہنا ہے کہ مظاہرین کی تعداد کے حوالے سے مختلف ذرائع کا کہنا ہے کہ 5 ہزار تک پہنچ گئی ہے جس میں مدارس اور سکولوں کے بچے بھی شامل ہو گئے ہیں۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close