ایران و اسرائیل بارے بیان سے کوئی تعلق نہیں۔ بی این ایم

کوئٹہ( ریپبلکن نیوز)بلوچ نیشنل موؤمنٹ کے مرکزی ترجمان نے میڈیا میں جاری کردہ بیان میں کہا کہ بتاریخ 24 نومبر چند اخبارات میں بلوچ نیشنل موومنٹ کے مرکزی ترجمان کے نام سے ایک من گھڑت بیان جاری ہوا ۔ جس میں کہا گیا ہے کہ بلوچ نیشنل موومنٹ ’’ اسرائیلی وزیر اعظم بنیامین نیتن یاہو کی طرف سے امریکہ کو ایران کے خلاف مزید پابندیاں لگانے پر قائل کرنے کی پالیسی کا خیر مقدم‘‘ کرتا ہے۔حقیقت یہ ہے کہ بلوچ نیشنل موومنٹ کی طرف سے ایسا کوئی بیان جاری نہیں کیا گیا۔ جن اخبارات میں یہ بیان شائع ہوا ہے وہ بلوچ نیشنل موومنٹ کے مرکزی ترجمان کے رابطہ کے ذرائع سے بخوبی واقف ہیں۔ ان کی یہ ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ تحقیق کریں کہ کس نے ایسا من گھڑت بیان پلانٹ کیا ہے اور ان اخبارات نے کیوں تصدیق کیے بغیر اسے شائع کیا۔بلوچ نیشنل موومنٹ کی پالیسی اس ضمن میں واضح ہے کہ مذہب کے نام پر علاقائی یا بین القوامی محاذآرائی سے دنیا میں امن کا قیام ممکن نہیں ہے۔ تمام ممالک کو بقائے باہمی کی بنیاد پر اپنے مسائل حل کرنے چاہئیں۔ اسی میں انسانیت کی فلاح و بقاء ہے۔ بلوچ نیشنل موومنٹ اس من گھڑت بیان کی تردید کرتا ہے اور اخبارات کے ادارتی ذمہ داران سے درخواست کرتا ہے کہ پارٹی ترجمان کے مروجہ رابطہ ذرائع کے علاوہ ان کو جو بیانات موصول ہوں ان کو شائع نہ کریں یا ان کی پارٹی ذمہ داران سے تصدیق کریں۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close