شہید غفار لانگو کا فرزند کوئٹہ سے قابض فورسز کے ہاتھوں اغواء

کوئٹہ(ریپبلکن نیوز) قبضہ گیر پاکستانی فورسز نے شہید شہید عبدالغفار لانگو کے فرزند ناصر احمد  کو شدید تشدد کے بعد اغواء کر کے نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا ہے۔

ناصر احمد کو پاکستانی خفیہ اداروں کے اہلکاروں نے 15 دسمبر 2017 کو کوئٹہ کے علاقے کلی الہ آباد سے  شدید جسمانی تشدد کے بعد اغواء کرکے اپنے ساتھ لے گئے جو تاحال بازیاب نہیں ہوسکا ہے۔لاپتہ ناصر احمد کے لواحقین نے ناصر کی بازیابی کے لیے انسانی حقوق کے اداروں سے پرزور اپیل کی ہے کہ انکے فرزند کی بازیابی کے لیے وہ اپنا انسانی فریضہ ادا کریں۔

یہ بھی پڑھیں: درچکواور جتانی بازار سے قابض فورسز نے چھ افراد کو اغواء کرلیا

ناصر احمد کے لواحقین نے خدشہ ظاہر کیا یے کہ اگر انسانی حقوق کے ادارے خاموش رہے تو دیگر لاپتہ افراد کی طرح دوران حراست ان کے فرزند کو بھی قتل کردیا جائے گا۔ دوسری جانب جب ناصر کے لواحقین نے ایف آئی آر درج کرانے کے لیے قریبی پولیس اسٹیشن کا رخ کیا تو پولیس اہلکاروں نے ایف آئی ار درج کرنے سے بھی انکار کردیا۔ خیال رہے کہ ناصر کے والد غفار لانگو کو بھی پاکستانی فورسز اور خفیہ اداروں کے اہلکاروں نے دوران حراست شہید کردیا تھا۔

متعلقہ عنوانات

مزید خبریں اسی بارے میں

Close