امریکی پابندیوں میں توسیع پر ایران کی انتقام لینے کی دھمکی

تہران (ریپبلکن نیوز) ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای نے امریکہ کی طرف سے جوہری معاہدے کی خلاف ورزیوں پر امریکہ کی طرف سے تہران پر 10 سال تک پابندیاں عائد کیے پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ نے دوبارہ ایران پر پابندیاں عائد کر کے ایران کے انتقام کو دعوت دی ہے۔ ایرانی میڈیا کے مطابق خامنہ ای کی آفیشل ویب سائیٹ پر پوسٹ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ امریکہ کے خلاف سخت انتقامی کارروائی کی دھمکی انہوں نے پاسیج فورسز کے اہلکاروں کے ایک گروپ کے ساتھ ملاقات کے دوران دی۔ آیت اللہ علی خامنہ کا کہنا تھا کہ امریکی انتظامیہ خود ایران کے ساتھ طے پائے معاہدے کی خلاف ورزیاں کررہی ہے۔ اس کی سب سے بڑی خلاف ورزی ایران پر مزید دس سال کے لیے پابندیاں عائد کرنا ہے۔ اگر امریکی انتظامیہ ایران کے خلاف مزید پابندیاں عائد کرتی ہے تو اسے تہران اور مغرب کے درمیان طے پائے جوہری سجھوتے کی سنگین خلاف ورزی سمجھا جائے گا۔ انہوں نے خبردار کیا کہ امریکہ کو علم ہونا چاہیے کہ وہ ایران کی طرف سے انتقامی کارروائی سے بچ نہیں سکے گا۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker