بلوچ لبریشن آرمی نے ہرنائی حملے کی ذمہ داری قبول رلی۔

کوہٹہ (ری پبلکن نیوز) بلوچ لبریشن آرمی کے ترجمان جئیند بلوچ نے کہا ہے کہ گذشتہ شب ہرنائی کے علاقے شہرگ میں بلوچ سرمچاروں نے ریاستی اہلکار حمیداللہ باروزئی اسکے بیٹے شمس اللہ و دیگر کو فائرنگ کرکے ہلاک کیا جبکہ دیگر دوافراد کو اغوا کرلیا۔ یہ بات انہوں نے منگل کی شب نامعلوم مقام سے سیٹلائٹ فون کے زریعے این این آئی کو بتائی ترجمان نے کہا کہ مذکورہ اشخاص کئی عرصے سے بلوچ سرمچاروں کے خلاف مخبری کر رہے تھے جنہیں کئی بار تنبیہ کی گئی تھی مگر وہ باز نہ آئے حالیہ بولان و گرد و نواح میں جاری آپریشن میں بلوچ سرمچاروں کے کیمپوں کی نشاندہی کرنے کے ساتھ فورسزز کی معاونت کرتے رہے بولان آپریشن میں بلوچ خواتین کی نشاندہی مخبر حمیداللہ اور اسکے دونوں بیٹوں نے کی تھی اور ان خواتین کو بعد میں فورسزز نے اغواہ کرلیا حمید اللہ و اسکے بیٹے بولان و گرد ونواح میں بلوچوں کو اغواہ کرنے میں براہ راست ملوث رہے تھے جنھیں گذشتہ شب انجام تک پہنچایا گیا جبکہ دیگر دو افراد جو کہ اس وقت ہماری حراست میں ہیں ان سے تفتیش کی جارہی ہیں تمام مخبر ہمارے نشانے پر ہیں جنہیں عبرتناک انجام تک پہنچایا جائے گا –

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker