بلوچستان لبریشن فرنٹ نے پاکستانی فورسز پر مختلف حملوں کی ذمہ داروں قبول کرلی

کوہٹہ (ری پبلکن نیوز)بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے مختلف حملوں کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے نامعلوم مقام سے سیٹلائٹ فون کے ذریعے کہا کہ ہفتہ کے روز سرمچاروں نے دشت کے علاقے کاشاپ سستگ کوہ کے مقام پر پاکستانی فوج پر حملہ کرکے کئی اہلکاروں کو ہلاک و زخمی کیا۔ کاشاپ کے مقام پر دو گاڑیاں انسپکٹر جنرل فرنٹیر کور (آئی جی ایف سی) کی آمد کے وقت علاقے میں اس کی سیکورٹی کیلئے کھڑی تھیں ۔ حملے میں ایک گاڑی ناکارہ ہوا ہے۔ کل رات دشت کے علاقے درچکو میں بھی آرمی کیمپ پر حملہ کیا گیا۔ یہ کیمپ ایک اسکول پر قبضہ کرکے بنایا گیاہے۔ جہاں کئی مورچے بنائے گئے ہیں ۔ کل فوج کی بہت بڑی تعداد آئی جی فرنٹیر کور کی سیکورٹی کیلئے یہاں پہنچائی گئی تھی ۔ حملے میں دشمن فوج کو بھاری نقصان اُٹھانا پڑا ہے۔ ہفتہ کی صبح کولواہ کے علاقے مالار میں آرمی کیمپ کی چیک پوسٹ پر اسنائپر حملہ کرکے ایک اہلکار کو ہلاک کیا۔ آواران رکین چوکی پر سرمچاروں نے خود کار ہتھیاروں سے حملہ کر کے فورسز کو بھاری جانی و مالی نقصان پہنچایا، یہ حملے بلوچستان کی آزادی تک جاری رہیں گے۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker