بی ایل ایف نے ڈیتھ اسکواڈ کے دو کارندوں کی ہلاکت کی ذمہ داری قبول کرلی

BLF 8کوئٹہ ( ریپبلکن نیوز) بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے فوج پر حملے اور ڈیتھ اسکواڈ کے دو کارندوں کی ہلاکت کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے نامعلوم مقام سے سیٹلائٹ فون کے ذریعے کہا کہ بدھ کے روز مشکے کے علاقے تنک میں شردوئی کے مقام پر پاکستانی فوج کی دو گشتی گاڑیوں پر بھاری ہتھیاروں سے حملہ کر کے چار اہلکاروں کو ہلاک اور متعدد کو زخمی کیا۔مشکے کے علاقے پر پکی میں نیشنل پارٹی کے رہنما علی حیدر ڈیتھ اسکواڈ کے دو کارندوں زائد ولد عبداللہ اور حمزہ ولد نیک کو سرمچاروں نے فائرنگ کر کے ہلاک کیا، اور دونوں ریاستی کارندوں کے اسلحہ ضبط کر لیے گئے جس میں ایک کلاشنکوف اور ایک 9 ایم ایم پستول شامل تھا۔ترجمان نے کہا کہ قابض ریاست کے سہولت کاروں سمیت ڈیتھ اسکواڈ کے کسی بھی کارندے کو معاف نہیں کیا جائے اورمقبوضہ بلوچستان کی آزادی تک قابض ریاستی فورسز اور انکے ایجنٹوں پرحملے جاری رہیں

مزید خبریں اسی بارے میں

Close