لاپتہ بلوچ اسیران و شہداء کے بھوک ہڑتالی کیمپ کو 2352دن ہوگئے

VBMP01کوئٹہ (ریپبلکن نیوز) لاپتہ بلوچ اسیران شہداء کے بھوک ہڑتالی کیمپ کو 2352دن ہوگئے اظہار یکجہتی کرنے والوں میں مشکے سے علی ٰخان داد محمد بلوچ اپنے ساتھیوں سمیت لاپتہ افراد شہداء کے لواحقین سے اظہار تعزیت کی اور انہوں نے کہاکہ نوجوان معاشرے کا ایک حساس طبقہ ہے او راپنی ہی حساسیت کی وجہ سے وہ ذہنی طورپر بے شمار صلاحیتوں سے مالا ملا ہوتاہے ۔ دینا کے تمام انقلابی تحریکوں میں نوجوان نے اہم کردار ادا کئے ہیں کوئی بھی انقلابی تحریک نوجوانوں کے شرکت کے بغیر مکمل نہیں ہوسکتا ۔ انقلاب کی تاریخ ساز فتح انقلاب کی تاریخ نے اس حقیقت کو واضح کردیا ہے کہ دنیا کہیں بھی ظلم وجبر اور بربریت کی انتہائی ہوئی ہے تو ہاں سب سے پہلے نوجوانوں نے بغاوت کا علم بلند کیا ہے ۔ وائس فار مسنگ پرسنز کے وائس چیئرمین ماما قدیر بلوچ نے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کہاک جنرل ضیاء کی سامراجی گمائشتکی اور بلوچستانمیں بلوچ دشمن کارروائیوں و پالیسیوں کے خلاف بلوچ نوجوانوں کی جد وجہد ضیاء آمریت کے ظلم وجبر کو بے نقاب کرکے علیم سطح پر ترقی پسند سامراج دشمن اور انقلابی تنظیم کے طورپر متعارف ہوگئیں۔ ایک اقنلابی اپنے نظرئے کی رہنائی اور تحریک کی کمال مہارت سے ایسے مرحلوں میں جرات کے ساتھ اپنے آرد شور اور اپنے مقاصد کے اصولوں کا واضح ڈھنگ سے اعلان کرکے آزاد ی سمیت اپنے راستے کا یقین کرتا ہے تکاہ نہ دوست اور نہ ہی دشمن دھوکے میں رہے ۔ ماما نے مزید کہاکہ شہداء بلوچستان کی قبریں ہمارے قومی وقار اور جد وجہد کی شاندار یادگاریں ہیں۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close