نیوزی لینڈ کی وزیراعظم کا ملک میں خود کارہتھیاروں پرپابندی کا اعلان

نیوز ڈیسک (ریپبلکن نیوز) وزیراعظم نیوزی لینڈ جیسنڈا آرڈرن نے ملک میں نیم خود کارہتھیاروں پر پابندی کا اعلان کردیا۔

وزیراعظم نیوزی لینڈ جیسنڈا آرڈرن نے نیوزکانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں نیم خود کار ہتھیاروں پر پابندی کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ فوجی طرزکے خود کار اسلحے پرمکمل پابندی ہوگی، شہریوں سے خود کارہتھیارواپس لیے جائیں گے، مساجد حملے میں آٹومیٹک اورسیمی آٹومیٹک اسلحہ استعمال کیا گیا، قانون سازی تک اسلحہ خریداری روکنے کیلیےعبوری اقدام اٹھایا گیا ہے جب کہ اسلحے پرپابندی کیلیے جلد قانون سازی کی جائےگی۔

وزیراعظم نیوزی لینڈ نے کہا کہ ایسالٹ اورنیم خودکاررائفلزکی فروخت پرپابندی ہوگی، فوجی نوعیت کےاسلحے پرپابندی قانون سازی کے فوری بعد عائد ہوگی، اسلحے سے متعلق اصلاحات عوام کے مفاد میں ہے، جس کام کی ہمیں شدت سے ضرورت ہے یہ اس کا آغاز ہے جب کہ ممنوعہ اسلحہ سےمتعلق شہری پولیس سے رابطہ کریں۔

واضح رہے کہ گزشتہ روزوزیراعظم نیوزی لینڈ جیسنڈا آرڈرن نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ سانحہ کرائسٹ چرچ میں شہید مسلمانوں کی یاد میں جمعہ کو سرکاری ریڈیو اورٹیلی ویژن سے براہ راست اذان نشرکی جائے گی اور نیوزی لینڈ میں 2 منٹ کی خاموشی اختیار کی جائے گی۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Back to top button