پاکستانی فوج کے حراست میں ایک معصوم بچہ شہید، مری قبیلے کے خواتین و بچے فورسز کے ہاتھوں اغوا

 ڈیرہ بگٹی (ریپبلکن نیوز) ڈیرہ بگٹی میں فورسز کی حراست میں ایک معصوم بچہ شہید، تفصیلات کے مطابق ڈیرہ بگٹی کے علاقے اُوچ سے چھ جنوری کو ریاستی فورسز کے ہاتھوں لاپتہ ہونے والے افراد میں سے ایک معصوم بچے نے دم توڑ دیا ہے جبکہ اس کی والدہ کو نیم مردہ حالت میں رہا کردیا گیا ہے بچے کی شناخت منظور ولد سونا بگٹی کے نام سے ہوئی ہے جس کی عمر ایک سال بتائی جارہی ہے جبکہ زرائع کے مطابق فورسز کے قید میں دیگر تین خواتین کی حالت بھی تشویشناک بتائی جارہی ہے ادھر بمبور، پیرکوہ، ہن، سہری دربار امیت کئی علاقوں میں گزشتہ کئی دنوں جاری آپریشن میں اطلاعت کے مطابق چار خواتین اور دو بچوں سمیت دس افراد کو فورسز نے بمبور سے حراست میں لیا ہے جن کا تعلق مری قبیلہ سے بتایا جارہا ہے اغوا شدہ افراد کو ڈیرہ بگٹی میں ایف سی کے قعلے میں رکھا جارہا ہے ان اغوا شدگان کے بارے میں مزید تفصیلات معلوم نہیں ہو سکی ہے۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker