بلوچستان میں جبری گمشدگیوں کے خلاف بی آر پی لندن کی جانب سے سات روزہ آگاہی مہم کا آغاز

لندن/رپورٹ (ریپبلکن نیوز)بلوچستان میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں، فوجی آپریشن اور جبری گمشدگیوں کے خلاف بلوچ ریپبلکن پارٹی کی جانب سے لند میں سات روزہ آگاہی مہم کا آغاز کیا گیاہے۔ آگاہی مہم کا آغاز بروز ہفتہ کیا گیا تھا جس میں بلوچ ریپبلکن پارٹی برطانیہ کے صدر اور پارٹی کے سینٹرل کمیٹی کے رکن منصور بلوچ بھی موجود تھے۔

آگاہی مہم  لندن میں برطانوی وزیر عظم کے دفتر کے سامنے سات روز تک جاری رہے گا جس کا مقصد بلوچستان میں بڑھتی ریاستی جارحیت کو دنیا کے سامنے اجاگر کرنا ہے۔

فورسز جہاں دو لوگوں کو رہا کردیتے ہیں تو وہی دس کو مزید جبری طورپر لاپتہ کر دیتے ہیں۔

 

بی آر پی برطانیہ چیپٹر کے صدر منصور بلوچ کا کہنا ہے کہ بلوچستان میں روزانہ جبری طور پر گمشدگیوں میں اضافہ ہورہا ہے جہاں دو لوگ رہا کردیئے جاتے ہیں وہی دس مزید اٹھائے جارہے ہیں۔ بلوچستان میں جبری گمشدگیوں کا سلسلہ کئی سالوں سے جاری ہے جس میں اب تک ہزاروں لوگوں کو لاپتہ کیا گیا ہے جبکہ دو لوگوں کو رہا کرنے کے بعد دس مزید لوگ اغوا کیئے جاتے ہیں۔

لندن میں وزیر اعظم کے دفتر کے سامنے لگائے گئے کیمپ میں آج سینکڑوں لوگوں نے دورہ کیا اور اظہار یکجہتی کااظہار کیا۔منصور بلوچ نے کہا ہے کہ ان کا آگاہی کیمپ ایک ہفتے تک جاری رہے گا اور ان کی کوشش ہوگی کہ زیادہ سے زیادہ لوگوں کو بلوچستان میں جاری ریاستی کشت و خون کے حوالے سے آگاہی فراہم کی جائے اور بلوچستان میں جبری گمشدگیوں اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کے حوالے سے دنیا کو آگاہ کیا جائے۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Back to top button