ایک مہینے سے زاہد عرصے سے کیچ میں پاکستانی بر بریت جاری ہے۔ شیر محمد بگٹی

کوئٹہ(ریپبلکن نیوز)بلوچ ریپبلکن پارٹی کے مرکزی ترجمان شیر محمد بگٹی نے کہا ہے کہ پاکستانی افواج نے کیچ کے علاقے دشت میں گزشتہ ایک مہینے سے زائد عرصے سے مسلسل بربریت جاری رکھی ہوئی ہے روزانہ کی بنیادوں پر چادروچاردیواری کی تقدوس کو پامال کیا جارہا ہے گھروں میں لوٹ مار اور جلانے کے سلسلے کو مزید وسیع کیا جارہا ہے اب تک صرف دشت میں سو سے زائد افراد کو فورسز کے اہلکار اٹھا کر لاپتہ کر چکے ہیں جن میں کئی نوعمر سکول کے طالب علم بھی شامل ہے ضلع کیچ کا دشت علاقہ وہاں کے مقامی لوگوں کیلئے جہنم بنادیا گیا ہے جس کی وجہ سے سیکڑوں خاندان وہاں سے نکل مکانی کرنے پر مجبور ہوچکے ہیں جبکہ کزشتہ روز مند کے علاقے سورو میں پاکستانی فورسز نے شہید غلام محمد بلوچ کے رشتے داروں کے گھروں پر حملہ کر کے نوجوان ظہور بلوچ کو شہید جبکہ چھ افراد کو اٹھا کر لے گئے اسی طرح ڈیرہ بگٹی کے علاقے پیرکوہ اور اس کے نواحی علاقوں ہن، کنڈور اور پاتر میں فورسز نے بڑے پیمانے پر آپریشن کرتے ہوئے آٹھ افراد کو اٹھا کے لاپتہ کردیا جبکہ دوران آپریشن فورسز نے مقامی لوگوں کے 100 سے زائد بکریوں کو بھی لے گئے۔ ترجمان نے مزید کہا ہے بلوچستان میں ریاستی دہشت گردی عروج پر ہے بلوچ قوم کے ہر مقطب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد کو بلا تفریق نشانہ بنایا جارہا ہے انھو نے کہا ہے پاکستانی بربریت پر عالمی انسان حقوق کے اداروں کی خاموشی سوالیہ نشان ہے۔

متعلقہ عنوانات

مزید خبریں اسی بارے میں

Close