شبیر بلوچ کی بازیابی کے لیے بی ایس او آزاد کا کینیڈا میں احتجاجی مظاہرہ

کوئٹہ(ریپبلکن نیوز)بلوچ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن آزاد کی جانب سے شبیر بلوچ کی عدم بازیابی کے خلاف کینیڈا میں احتجاجی مظاہرہ کیا گیا، مظاہرے میں بی ایس او آزاد اور بی این ایم کے رہنماؤں اور کارکنوں نے شرکت کی، شرکاء نے ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈ اُٹھا رکھے تھے جن پر شبیر بلوچ کی فوری بہ حفاظت بازیابی کے حوالے سے نعرے درج تھے۔ مظاہرین سے خطاب میں رہنماؤں نے کہا کہ بلوچستان میں سیاسی کارکنوں کے خلاف عرصہ حیات ایک عرصے سے تنگ کیا جارہا ہے، سیاسی جدوجہد کے بنیادی حق سے زبردستی دستبردار کرنے کے لئے ہزاروں سیاسی لیڈر و کارکنان ٹارگٹ کلنگ اور اغواء کے بعد شہید کیے جا چکے ہیں جبکہ ہزاروں کارکن تاحال لاپتہ ہیں۔ لاپتہ کارکنان کی فہرست میں روزانہ کی بنیاد پر تیزی کے ساتھ اضافہ ہورہا ہے۔ بی ایس او آزاد کے رہنماء شبیر بلوچ کی اغواء نما گرفتاری اسی سلسلے کی کھڑی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایمنسٹی انٹر نیشنل و انسانی حقوق کے دیگر اداروں کی تشویش اور مطالبے کے باوجود فورسز شبیر بلوچ کو بازیاب نہیں کررہے ہیں جس سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ ریاست کے ادارے انسانی حقوق کی مجوزہ قوانین کی پابندی سے خود کو مستثنیٰ سمجھتے ہیں۔ رہنماؤں نے مطالبہ کیا کہ شبیر بلوچ سمیت ریاستی ٹارچر سیلوں میں بند ہزاروں سیاسی کارکنان کی بازیابی کے لئے اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کے دوسرے محافظ ادارے اپنا فوری کردار ادا کریں، مذکورہ اداروں کی خاموشی سے فائدہ اٹھا کر فورسز سیاسی کارکنوں کو نقصا ن پہنچانے کے سلسلے کو جاری رکھیں گے۔اس کے علاوہ بی ایس او آزاد کے ترجمان نے کوئٹہ، مند اور تمپ کے علاقوں میں فورسز کی حالیہ آپریشن کے دوران درجنوں لوگوں کی گرفتاری اور متعدد کی ہلاکت کے ردعمل میں کہا کہ بلوچ نسل کشی کی کاروائیاں پوری شدت کے ساتھ جاری ہیں۔ چادر و چاردیواری کی پامالی بلوچستان بھر میں فورسز کا معمول بن چکا ہے۔ ریاستی فورسز کی بربریت سے بلوچستان کو کوئی طبقہ بھی محفوظ نہیں ہے جس کی وجہ سے عام لوگ شدید خوف و بے اطمینانی کا شکار ہیں، فورسز نے مند سے گزشتہ روز آپریشن کے دوران بلوچی زبان کے فلموں میں اداکاری کرنے والے ولید تاھیر سمیت ایک درجن سے زیادہ لوگوں کو اغواء کے بعد لاپتہ کردیا۔ ترجمان نے کہا کہ عالمی اداروں کی عدم توجہی کے باعث ریاستی طاقت نہتے بلوچوں کی ہلاکت کا سبب بن رہی ہے، انہوں نے مطالبہ کیا کہ بلوچ نسل کشی کی کاروائیاں روکنے اور لاپتہ سیاسی کارکنوں کی بازیابی کے لئے عالمی ادارے اپنا کردار ادا کریں۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker