درگاہ لعل شہباز قلندر میں دھماکہ، 72 سے زاہد ہلاکتیں

سیون شریف (ریپبلکن نیوز)سہون میں درگاہ لعل شہباز قلندر کے احاطے میں دھماکے کے نتیجے میں خواتین سمیت 72 افراد جاں بحق اور خواتین و بچوں سمیت 100 سے زائد زخمی ہو گئے۔ دھماکا درگاہ لعل شہباز قلندر کے احاطے میں اس وقت ہوا جب وہاں دھمال ڈالی جارہی تھی، جبکہ دھماکے کے بعد لوگوں میں بھگدڑ مچ گئی اور درگاہ کے احاطے میں آگ لگ گئی۔ دھماکے کے بعد پولیس کی ٹیموں نے درگاہ لعل شہباز پہنچ کر جائے وقوع کو گھیرے میں لے لیا، جبکہ لوگوں نے اپنی مدد آپ کے تحت زخمیوں کو درگاہ کے قریب واقع ہسپتال منتقل کیا۔ ایم ایس تحصیل ہسپتال سہون ڈاکٹر معین الدین صدیقی کا کہنا تھا کہ ’ہسپتال میں 72 افراد کی لاشیں اور 100 سے زائد زخمیوں کو لایا جا چکا ہے۔‘ شدید زخمیوں کو دادو اور جامشور کے ہسپتالوں میں منتقل کیا جارہا ہے جہاں 50 سے زائد زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے، جبکہ دادو، جامشور اور بھان سید آباد کے ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی۔ جامشورو کے سینئر پولیس افسر کا کہنا تھا کہ ’بظاہر دھماکا خودکش معلوم ہوتا ہے جبکہ حملہ آور سنہری دروازے سے درگاہ میں داخل ہوا۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close