منتخب نمائندے ذمہ داری دینگے،دلخراش واقعات رونما نہیں ہونگے،طاہر علی ہزارہ

کوئٹہ (ریپبلکن نیوز) ہزارہ سیاسی کارکنوں کے سربراہ طاہر علی ہزارہ نے کہا ہے کہ سانحہ ہزارگنجی واقعے کے بعد ہزارہ ڈیمو کریٹک پارٹی کے چیئر مین عبدالخالق ہزارہ اور رکن صوبائی اسمبلی قادر علی نائل دھرنے کے حوالے سے آئندہ کا لائحہ عمل کافیصلہ کرینگے، منتخب نمائندے ذمہ داری دینگے کہ آئندہ اس طرح کے دلخراش واقعات رونما نہیں ہونگے،
آئندہ ہزارہ برادری کو نشانہ بنا یا گیا تو عبدالخالق ہزارہ اور قادر نائل کی اسمبلی رکنیت سے مستعفی ہونے تک دھرنا دیا جائے گا۔
ان خیالات کا اظہار انہوں نے دھرنے کے شرکاء سے خطاب میں کیا ،انہوں نے کہا کہ تمام سیاسی جماعتوں کے مشکور ہیں کہ انہوں نے سانحہ ہزارگنجی کے واقعے کے بعد ہمارے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا ایک سازش کے تحت ہزارہ برادری کو نشانہ بنا یا جارہا ہے ہم کسی مسلک فرقے یا قوم کے خلاف نہیں بلکہ ہم سب کوئٹہ کے باسی ہیں اور ایک دوسرے سے پیار اور محبت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں تحفظ فراہم کیا جائے ہمیں کیوں ایندھن کے طور پر استعمال کیا جارہا ہے ہم نے ہمیشہ صوبے کی ترقی وخوشحالی کیلئے اقدامات اٹھائے ہیں ۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Back to top button