بلوچستان کے مختلف علاقوں میں آپریشن جاری

کوئٹہ(ریپبلکن نیوز) بلوچستان کے مختلف علاقوں میں پاکستانی فوجی آپریشنوں میں متعدد بلوچ اغواء بعد لاپتہ کیے جا چکے ہیں۔آواران میں کل سے جاری فوجی آپریشن میں اب تک 30کے لگھ بگھ بلوچوں کو اغواء بعد لا پتہ کیا جا چکا ہے ۔جبکہ تربت کے علاقے بالیچہ اور سری کہن فوج کے محاصرے میں ہیں جہاں بڑے پیمانے پر فوجی آپریشن کا خدشہ ہے۔ بالیچہ اور سری کہن کے داخلی اور خارجی راستے فوج نے مکمل محاصرے میں لے رکھے ہیں جہاں آنے اور جانے والوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔دوسری جانب کوئٹہ کے علاقے ہزار گنجی سے پاکستانی خفیہ اداروں کے اہلکاروں نے تین مری بلوچوں کو اغواء بعد لاپتہ کر دیا ہے جن کی شناخت شمبوخان ولد محمد علی اور انکے والد محمد علی ولد تگیہ خان سے ہوگئی ہے۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close