جنیوا؛ شہر بھر میں آزاد بلوچستان کے پوسٹر آویزا

جنیوا (ریپبلکن نیوز) جنیوا میں آزاد بلوچستان کے پوسٹر آویزا، تفصیلات کے مطابق  سوئٹزرلینڈ کے شہر جنیوا  میں آزاد بلوچستان اور بلوچستان میں جاری انسانی حقوق کے حوالے سے پوسٹر آویزا کیئے گئے ہیں شہر بھرمیں بشتر سڑکوں، بسوں، اور ٹرامز پر بڑے سائز کے پوسٹر لگائے گئے ہیں جن پر بلوچستاب کی آزادی کے حق میں اور وہاں پر جاری پاکستانی بربریت کو اجاگر کرنے کے حوالے سے تحریر موجود ہیں، بلوچ ریپبلکن پارٹی کی اقوام متحدہ میں نمائدہ برائے انسانی حقوق عبدل نواز بگٹی نے ٹوئیٹر پر پر جاری اپنے پیغام میں کہا ہے کہ پوسٹرزآویزاکرنے کا مقصد بلوچ مسلئے کو دنیا کے سامنے اجاگر کرنا ہے اور اس سلسلے میں مزید کام کرینگے۔ خیال رہے کہ گزشتہ سال نواب براہمدغ بگٹی نے علان کیا تھا کہ وہ جنیوا میں بلوچستان مسئلے کو بھر پور انداز سے پیش کرینگے اس دوران بلوچ ریپبلکن پارٹی کے اقوام متحدہ میں نمائدے کی پاکستان کے نمائدگان سے جھڑپ بھی ہوئی اور بی آر پی کے نمائدے کو خاموش کرنے کی کوشش کی گئی لیکن امریکہ، برطانیہ، نارورے، ہالینڈ سمیت پانچ ممالک نے پاکستان کے اعتراض کو مسترد کرتے ہوئے بی آر پی کی حمایت کی تھی جس کے بعد پاکستان کو پورے اقوام متحدہ میں شرمندگی کا سامنا کرنا پڑا تھا اور اس بھر پور کامیابی کے بعد بلوچ قومی رہنما نواب براہمدغ بگٹی نے کہا تھا کہ جنیوا میں اپنی سرگرمیوں میں اضافہ کرینگے خیال رہے کہ بی آر پی کی اس حوالے سے مزید سرگرمیوں کا علان ہوچکا ہے اور اس حوالے سے اقوام متحدہ میں ایک بڑے سیمینار کی تیاریاں مکمل کی جاچکی ہے جبکہ جنیوا شہر میں ریلی کے علاوہ مظاہرہ بھی کیا جائے گا۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close