سلام آباد سے انسانی حقوق کے کارکنان کے جبری گمشدگی کی مزمت کرتے ہیں، قوم پرست رہنما نواب براہمدغ بگٹی

نیوز ڈیسک (ریپبلکن نیوز) آزادی پسند بلوچ رہنما نواب براہمدغ بگٹی کے جانب سے سماجی اور آنسانی حقوق کے کارکنان کی جبری گمشدگیوں کی مزمت، سماجی رابطے کی ویب سائیٹ ٹوئیٹر پر اپنے جاری پیغام میں بلوچ قوم پرست رہنما اور قائد بلوچ ریپبلکن پارٹی نواب براہمدغ بگٹی نے اسلام آباد سے لاپتہ ہونے والے انسانی حقوق کیلئے سرگرام اور دانشوروں کے جبری گمشدگی کی شدید مزمت کرتے ہوئے کہا ہے ان افراد کو بلوچستان میں پاکستانی افواج کے انسانیت کے خلاف جرائم پر بات کرنے کے پاداش میں لاپتہ کردیا گیا ہے نواب بگٹی کا مزید کہنا تھا کہ صرف بلوچ نہیں جو مارے اور لاپتہ کیئے جارہے ہیں بلکہ ان تمام افراد کو اسی طرح لاپتہ اور مارا جا رہا ہے جو بلوچستان میں پاکستانی فوج کے جرائم کے خلاف بات کرتا ہے خیال رہے کہ اسلام آباد سے گزشتہ جمعہ سے لیکر اب تک نو ایسے افراد کو لاپتہ کیا جا چکا ہے جو یا تو بلوچستان کے لاپتہ افراد کے بارے میں کھل کر اپنے رائے کا اظہار کرتے تھے یا پھر خفیہ اداروں کے ایسے اعمال کے خلاف بھی بھر ہور انداز میں لکھتے اور بات کرتے تھے جو کہ آئین اور قانون دے ماورا ہو ان افراد میں جانے مانے لیکچرار سلمان حیدر، عاصم سعید اور وقاص گورایا شامل ہیں

مزید خبریں اسی بارے میں

Close