تنظیم کے ڈپٹی جنرل سیکرٹری کی گرفتاری کے خلاف کل کوئٹہ میں احتجاجی مظاہرہ کیا جائیگا۔بی آر ایس او

کوئٹہ (ریپبلکن نیوز) بلوچ ریپبلکن اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی سوشل میڈیا میں جاری پیغام میں کہا گیا ہے کہ تنظیم کے ڈپٹی جنرل سیکرٹری فیضان عرف مزار بلوچ کی گرفتاری اور دہشتگر قراردینے کے خلاف کل بروزِ ہفتہ کوہٹہ پریس کلب کے سامنے ایک احتجاجی مظاہرہ کیا جائیگا۔یاد رہے کہ مزار بلوچ کو پاکستانی خفیہ اداروں کے اہلکاروں نے 25جون کو کوئٹہ سے اغواء بعد لاپتہ کر دیا تھا جسے کل بلوچستان کے وزیرِ داخلہ سرفراز بگٹی کی پریس کانفرنس میں منظر عام پر لاکر دہشتگر قرار دیا گیا تھا ۔ مزار بلوچ سمیت پانچ دیگر بلوچوں کو بھی منظر عام پر لاگر یونائٹڈ بلوچ آرمی سے جوڈا گیا تھا جبکہ یونائٹڈ بلوچ آرمی کی جانب سے جاری کردہ بیان میں سرفراز بگٹی کے ان دعوؤں کو بے بنیاد قرار دیا گیا ہے۔

مزید پڑھیں: فیضان عرف مزار بلوچ ایک پُرامن سیاسی کارکن ہے۔ بی آر ایس او

بی آر ایس او کی جانب سے جاری کردہ پیغام میں بلوچ قوم، صحافی حضرات، طلبہ اور انسان دوست حضرات سے درخواست کی گئی ہے کہ کل بروزِ ہفتہ دن 4بجے کوئٹہ پریس کلب کے باہر بی آر ایس او کے احتجاج میں شامل ہوکر اپنا انسانی فریضہ انجام دیں۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close