بھوک ہڑتال پر بھیٹے طلباء کو اگر کچھ ہوتاہے تہ اس کا ذمہ دار یونیورسٹی انتظامیہ اور حکمران ہونگے۔ بی ایس اے سی

کوئٹہ( ریپبلکن نیوز ) بلوچ اسٹوڈنٹس ایکشن کمیٹی کے ترجمان نے قائد اعظم یونیورسٹی انتظامیہ کی ہٹ دھرمی پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پچھلے تین ہفتوں سے طلباء اپنے حقوق کی خاطر سراپا احتجاج ہیں لیکن تاحال یونیورسٹی انتظامیہ اپنی ضد پر قائم ہے۔ترجمان نے کہا کہ جو طلباء تادم مرگ بھوک ہڑتال پر بیٹھے ہیں ان کو کسی بھی قسم کا نقصان پہنچا تو اس کی ذمہ دار یونیورسٹی انتظامیہ اور ہمارے خاموش حکمران ہونگے. اس ساری صورتحال میں ہمارے حکمرانوں کو چاہئے کہ طلباء کی بحالی کیلئے کوششیں تیز کریں صرف یونیورسٹی انتظامیہ سے ملاقات اور اپنی سیاست چمکانا بند کریں۔ترجمان نے کہا طلباء کی صورتحال حال کو مدنظر رکھتے ہوئے ہوئے بلوچ اسٹوڈنٹس ایکشن کمیٹی بروز پیر کوئٹہ پریس کلب کے سامنے علامتی بھوک ہڑتالی کمیپ لگائے گی. ہم بلوچستان کے نمائندوں, سول سوسائٹی, طلباء تنظیموں اور عوام سے اپیل کرتے ہیں کہ کیمپ میں شرکت کر کے طلبا ء کے ساتھ اظہار یکجہتی کریں۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close