بی ایل ایف نے فوج پر حملے کی ذمہ داری قبول کرلی

کوئٹہ(ریپبلکن نیوز)بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے کہا کہ منگل کے روز سرمچاروں نے مشکے کے علاقے نوکجو شیرگی میں فوجی کیمپ پر ایک شدید حملہ کیا۔ کیمپ میں ریاستی ڈیتھ اسکواڈ کے کارندے بھی موجود تھے۔ حملے کے بعد فوجی کمک اور ریاستی ڈیتھ اسکواڈ نے سرمچاروں کو گھیرنے کی کوشش کی تو دوطرفہ جھڑپیں شروع ہوئیں، جس میں سرمچار بحفاظت نکلنے میں کامیاب ہوئے اور قابض فوج اور اُس کے ڈیتھ اسکواڈ کو بھاری جانی و مالی نقصان اُٹھانا پڑا ہے۔ جھڑپوں کے بعد دو ہیلی کاپٹر اورتین ایمبولینس اسی علاقے میں پہنچے ہیں۔ خیال کیا جا رہا ہے کہ یہ ہیلی کاپٹر اور ایمبولینس ہلاک اور زخمی اہلکاروں کو اُٹھانے آئے تھے۔منگل ہی کے روز بلیدہ کے علاقے کلگ وکائی میں قائم ایف سی کیمپ کے مرکزی مورچہ میں اسنائپر سے نشانہ بنا کر ایک اہلکار کو ہلاک کیا،گہرام بلوچ نے کہا کہ مقبوضہ بلوچستان کی آزادی تک قابض ریاستی فورسز پر حملے جاری رہیں گے ۔ 

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker