ڈیرہ بگٹی میں فوجی آپریشن جاری ۱۰ افراد شہید، خواتین سمیت درجنوں اغوا

ڈیرہ بگٹی (ریپبلکن نیوز) ڈیرہ بگٹی کے سیول ہسپتال میں مزید پانچ افراد کی لاشیں لائی گئی ہیں، آمدہ اطلاعت کے مطابق ڈیرہ بگٹی میں پاکستانی فوج کے اہلکاروں نے مزید پانچ لاشیں ڈیرہ بگٹی میں سیول ہسپتال کے انتظامیہ کے حوالے کی ہیں  جن کو آج پشینی کے علاقے میں شہید کیا گیا ہیں جن کی شناخت لال خان بگٹی، رندان بگٹی، خان بخش بگٹی، جامو بگٹی اور درجمال بگٹی کے ناموں سے ہوئے ہیں جبکہ پشینی ہی میں آج ایک کمسن چرواہے کو بھی پاکستانی فوجی اہلکاروں نے پکڑ کر پھر اسے شہید کر کے پھینک دیا، یاد رہے کہ گزشتہ شب پاکستانی فوج نے معروف انکلابی شاعر مسک علی بگٹی کو بھی شہید کردیا جس کی عمر ۸۰ سال تھی اسے شہید کرنے کے بعد اس کی جسد خاکی کو ایک گہری کھائی میں پھینک دیا تھا ڈیرہ بگٹی میں گزشتہ تین دنوں سے جاری آپریشن میں اب تک ۱۰ افراد شہید جبکہ بیس سے زائد زخمی ہیں جبکہ آخری اطلاعت کے مطابق پاکستانی افواج نےسہری دربار سے بگٹی قبیلے کی زیلی شاخ شالواںی کے چار خواتین اور دو بچوں کو بھی اغوا کیا ہے اور انھہیں ڈیرہ بگٹی میں ڈیتھ سکواڈ کے علی گوہر پیروزنی بگٹی کے گھر میں رکھا جارہا ہے۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker