بی ایل ایف نے مختلف حملوں کی ذمہ داری قبول کرلی

کوئٹہ(ریپبلکن نیوز)بلوچستان لبریشن فرنٹ کے ترجمان گہرام بلوچ نے مختلف حملوں کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا جمعرات کی صبح ضلع کیچ کے علاقے ناصر آباد میں سرمچاروں نے فوجی چیک پوسٹ پر راکٹوں سے حملہ کرکے بھاری جانی و مالی نقصان پہنچایا۔ بلیدہ میں بٹ فوجی کیمپ کی چوکی پر اسنائپر حملہ کرکے ایک فوجی اہلکار کو ہلاک کیا۔ آج ہی آواران کولواہ میں بزداد آرمی کیمپ پر حملہ کرکے نقصان پہنچایا۔ جمعرات ہی کے روز مشکے پروار آرمی کیمپ پر خود کار ہتھیاروں سے حملہ کر کے تین اہلکاروں کو ہلاک اور ایک کو زخمی کیا۔ کل آواران کے علاقے پیراندر میں فوجی چیک پوسٹ پر اسنائپر حملہ کرکے ایک اہلکار کو ہلاک کیا۔ گہرام بلوچ نے کہا کہ کل شام کو ضلع گوادر کے تحصیل اورماڑہ میں بسول ندی میں تیل و گیس تلاش کرنے والی چینی کمپنی کی کیمپ اور سیکورٹی اہلکاروں پر حملہ کرکے چھ اہلکاروں کو ہلاک کیا۔ سرمچاروں نے حملہ کے بعد کیمپ میں گھسنے کی کوشش کی تو دوسری طرف موجود فوجی اہلکار مدد کو پہنچے تو تیس منٹ کی شدید جھڑپ کے بعد سرمچار بحفاظت نکلنے میں کامیاب ہوئے۔ یہ منصوبہ قابض پاکستان کی چین کے ساتھ نام نہاد ترقی اور چین پاکستان اکنامک کوریڈور (سی پیک ) کا حصہ ہے۔ جبکہ ان علاقوں میں پاکستانی فوج روزانہ کی بنیاد پر آپریشن، اغوا اور قتل اور وسائل کی لوٹ مار میں مصروف ہے۔ قابض پاکستان بلوچ وسائل کے بدلے بلوچ قوم کو ختم کرنے کے درپے ہے۔ یہ حملے بلوچستان کی آزادی تک جاری رہیں گے۔-

مزید خبریں اسی بارے میں

Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker