ہوشاپ میں خونی آپریشن کا اغاز،تین افراد کے ہلاکت کی اطلاعات

تمپ (ریپبلکن نیوز) ہوشاپ کے مختلف علاقوں میں پاکستانی فورسز کا خونی آپریشن کا آغاز، تفصیلات کے مطابق ہوشاپ کے گرد و نواح سمیت کولوا کے مختلف علاقوں میں فورسز نے بڑے پیمانے پر زمینی اور فضائی آپریشن کا آغاز کیا ہے سگیک میں گھروں پر شیلنگ اور بمباری سے تین افراد کی شہادت کی اطلاعات ہیں جبکہ بچوں اور خواتین سمیت متعدد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاعات  بھی موصول ہوئی ہیں. کولوا کے علاقے بلور میں بھی آپریشن کی اطلاعات ہیں  جس میں متعدد گھروں کو نظر آتش کردیا گیا ہے واضح  رہے کہ ہوشاپ میں ایف ڈبلیوں او نے پاک چین راہداری سے منسلک دوسرا روٹ جو ہوشاپ سے کولوا اور بیلہ تک جاتا ہےکی تعمیر کیلئے راہ ہموار کرنے کیلئے آپریشن شروع کردی ہے جس کو کامیاب بنانے کیلئے عام آبادیوں پر شیلنگ کر کے خوف و حراس پھیلایا جارہا ہے تاکہ مقامی افراد نکل مکانی کریں اور مزاحمت کے حوالے سے کوئی مشکلات نہ ہوں۔ ہوشاپ اور کولوا بلوچستان کے پسماندہ ترین علاقے ہیں اور یہاں پر غریب ترین لوگ رہتے ہیں جن کو دو وقت کی روٹی میسر نہیں ہوتی.  ان علاقوں میں  کئی سالوں سے کوئی ترقیاتی کام نہیں ہو رہا ہے جبکہ نام نہاد راہداری نے ہوشاپ کے لوگوں سے جینے کا حق بھی چین لیا ہے۔

مزید خبریں اسی بارے میں

Close